ٹرمپ کی بیٹی ایوانکا انتہائی شرمناک کام کرتے پکڑی گئی، بے ضرر خاتون کی پوری زندگی تباہ کردی کیونکہ ان کا شوہر۔۔۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ ہر کسی کو تنقید کا نشانہ بناتے ہیں لیکن ان کی اپنی بیٹی ایوانکا جو کچھ کر رہی ہیں اس پر انہوں نے کبھی نظر ڈالنا گوارا نہیں کیا۔ ایوانکا کے فیشن برانڈ کو مال سپلائی کرنے والی فیکٹریوں میں غریب مزدوروں کے ساتھ جو ہوتا ہے وہ تو ایک طرف، اس معاملے کی بات کرنے والے بھی غائب ہو جاتے ہیں۔ ایک بدقسمت چینی خاتون کے خاوند کے ساتھ پیش آنے والا دردناک ماجرا اس صورتحال کی ایک جھلک دکھانے کے لئے کافی ہے۔
خلیج ٹائمز کے مطابق ڈینگ گلیان نامی خاتون دو بچوں کی ماں ہے لیکن چونکہ ان کے خاوند کو غائب کردیا گیا ہے لہٰذا وہ اپنے بچوں کو تنہا چھوڑ کر دن رات محنت مشقت کرنے پر مجبور ہوگئی ہیں۔ ان کے شوہر کا قصو رصرف اتنا تھا کہ وہ امریکی صدر کی بیٹی ایوانکا ٹرمپ کے برانڈ کے لئے کام کرنے والے چینی سپلائرز کے غیر قانونی طرز عمل کی تفتیش کررہے تھے۔ ایوانکا ٹرمپ خواتین کے حق میں بڑھ چڑھ کر بولتی ہیں اور یہ تاثر بھی دیتی ہیں کہ وہ خواتین کو بااختیار بنانے کے لئے جدوجہد کررہی ہیں لیکن کم از کم اس چینی خاتون کے لئے وہ بے حد منحوس ثابت ہوئی ہیں۔
ڈینگ کا کہنا ہے کہ ان کے خاوند کچھ فیکٹریوں کے بارے میں تحقیق کررہے تھے جو ایوانکا ٹرمپ کے برانڈ کے لئے جوتے بناتی ہیں۔ ہو اہیفنگ اور ان کے دو ساتھیوں کو سکیورٹی اہلکاروں نے گرفتار کرلیا کیونکہ ان پر الزام تھا کہ انہوں نے اپنی تحقیق کے دوران خفیہ ریکارڈنگ آلات استعمال کئے تھے۔
ہوا ہیفنگ نیویارک سے تعلق رکھنے والے ادارے چائنہ لیبر واچ کے لئے کام کررہے تھے اور انہوں نے اس بات کے شواہد حاصل کرلئے تھے کہ ایوانکا ٹرمپ کی کمپنی کو مال سپلائی کرنے والی فیکٹریوں میں مزدوروں کے حقوق پامال کئے جارہے ہیں، انہیں اوورٹائم پر مجبور کیا جاتا ہے اور اجرت بھی بہت کم دی جاتی ہے۔ ان شواہد میں ایک ایسی ویڈیو بھی شامل تھی جس میں ایک منیجر نے ایک مزدو رکے سر پر لمبی ایڑی والا جوتا مار کر اسے زخمی کردیا او رمزدور کے سر سے خون جاری ہوگیا۔ دریں اثناءایوانکا ٹرمپ نے اپنے برانڈ سے منسلک سپلائرز کے بارے میں سامنے آنے والے الزامات پر خاموشی اختیار کررکھی ہے۔

loading...
>